محبت کیا ہے

what is love

محبت وہ اکسیر ہے جس سے روح کی کدورتیں اس طرحپگھل جاتی ہیں جیسے نمک پانی ہو جاتا ہے، یہ ایسی جادوئی چھڑی ہے جو سخت سے سخت دل کو بھی موم بنا دیتی ہے
محبت ہی ہے جو دشمن کو دوست بنا دے, بغض و عناد کو اخوت میں بدل دینے کا ہنر رکھتی ہے-
ہم جب پہلی صدی ہجری کے معاشرے کو دیکھتے ہیں تو وہ ہمیں اخوت اور محبت کی مثال نظر آتا ہے- لوگوں میں ہمدردی، بھائی چارے اور ہم خیالی  جیسے عظیم جذبات  نظر آتے ہیں- ایک دوسرے کی مدد کو ترجیح دیا جانا اور معاوضے کے طور پر بے لوث محبت کا اظہار، یہ وہ اقدار ہیں جو اج کے لوگوں میں کم نظر آتے ہیں- میں اس بات سے حیران ہوں کہ لوگوں نے نئی ایجادات کے ساتھ اپنے اقدار کو بھی نئی سوچ کا پابند بنا دیا ہے- پرانے خیالات کو ایک اولڈ سو کالڈ سوچ سمجھ کر احساسات سے محروم چکی میں ڈال دیا گیا ہے اور نئی جذبات سے عاری،  ماڈرن خیالات سے بھرپور سوچ کو ایک دائمی سوچ قرار دے کر نئی نسل کو سونپ دیا گیا ہے-

میں سوچتی ہوں کہ ایسی زہنی کیفیات، ایسے بے ضرر ضمیروں میں، جن کو اپنی فکر دوسروں سے ممتاز نظر آتی ہے، ان کو اس احساس کی کیا قدر جن کے ختم ہونے کے اندیشے سے ہی ہمارے پرکھوں میں خوف کی ایک لہردوڑ اٹھتی تھی آج  کی نسل نے محبت کے معیار تشکیل دے دیے ہیں وہ محبت کو  زمانے بھر سے آئے ہزاروں تخیلات کا مجموعہ قرار دیتے ہیں کوئی اسے تلخ حقیقت قرار دیتے ہیں اور کوئی اسے بے نام جہاں.. کوئی اس بات پہ متفق ہے کہ محبت میں سب جائز ہے اور کوئی اس بات کا روادار کہ محبت کے اصولوں پر مبنی اعمال کیے جائیں… کوئی اسے تپتی ریت میں بکھرا موتی کہتا ہے اور کوئی اسے سمندر کی گہرائیوں میں ڈوبا ان دیکھا ساحل
میرا ماننا ہے کہ ان بے رنگ تقاضوں سے عظیم ہے یہ احساس… جس کی نہ ہی کوئی حد ہے اور نہ کوئی دائرہ
اپنی سوچ کے اظہار کے لئے میں
بلال عبدالحی حسنی ندوی کے اس شعر سے استفادہ حاصل کروں گی.. وہ کہتےہیں کہ

از محبت تلخہا شیریں شود
از محبت مسہا زریں شود
از محبت دردہا صافی شود
از محبت خارہا گل می شود
وز محبت سرکہا مل می شود

یعنی محبت کے زیر اثر کڑوی چیزیں میٹھی ہو جاتی ہیں

، محبت سے تانبا سونا بن جاتا  ہے

، محبت سے رنجشیں ختم ہو جاتی ہیں،

محبت سے درد شفا بننے والا بن جاتا ہے،

محبت سے کانٹے پھول بن جاتے ہیں اور محبت سے  سرکے(پھسلے) شراب بن جاتے ہیں

از قلم امبر فاطمہ 

3 COMMENTS

  1. بہت خوبصورت۔۔ بہت عمدہ لکھا آپ نے
    اگر انسان حق پر ہو تو اس کا ہر عمل محبت ہے۔۔

  2. Muhabbat ik hawa hy jisy koi chuu Ni skta or us ki majodgi k bina koi reh b Ni skta
    Muhabbat ik ehsas hy Jo har insan k pass hota Ni
    Muhabbat tu bus perwana k trha chama (roshani) k
    pass jaa k jal jany ka Nam hy
    Muhabbat tu bus bulbul ki trha ik phool py apni nazar jamaye rakhny ka Nam hy

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here